9

خامیاں نکالنے کے بجائے زندگی میں مثبت چیزیں کرنے کو ترجیح دیتی ہوں، تاپسی پنوں

 خامیاں نکالنے کے بجائے زندگی میں مثبت چیزیں کرنے کو ترجیح دیتی ہوں، تاپسی پنوں

اداکارہ تاپسی پنوں بے باک انداز میں بات کرنے کے لیے مشہور ہیں چاہے وہ سیاست ہو یا خواتین سے متعلق موضوعات وہ ہر جگہ کھل کر اپنی رائے کا اظہار کرتی ہیں۔

حال ہی میں بی بی سی کو دئیے گئے انٹرویو میں تاپسی پنوں نے اپنے ارد گرد موجود لوگوں اور اپنے ملک کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہا کہ ہر ملک کی خامیاں اورخوبیاں ہوتی ہیں لہٰذا یا تو میں ان خامیوں کو لے کر بیٹھ جاؤں اور اسی پر تنقید کرتی رہوں یا پھر اگر میں کچھ اچھا کرسکتی ہوں تو وہ کروں۔ تاپسی نے کہا میں گلاس آدھا خالی دیکھنے کے بجائے آدھا بھرا ہوا دیکھنا پسند کرتی ہوں۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: کنگنا کی ’سستی کاپی‘ قراردئیے جانے پرتاپسی پنوں کا جواب

اداکارہ تاپسی پنوں نے اپنی آنے والی فلم’’سانڈ کی آنکھ‘‘کے بارے میں بات کرتے ہوئے کہ اس فلم میں اداکیا جانے والا کردار ان کے کیریئر کا اب تک کا مشکل ترین کردار ہے۔

اس خبرکوبھی پڑھیں: بھارت میں مسلمانوں کو جان بوجھ کر نشانہ بنایا جاتا ہے

واضح رہے کہ اداکارہ تاپسی پنوں نے ’’ملک‘‘،’’پنک‘‘،’’نام شبانہ‘‘،’’جڑواں2‘‘جیس فلموں میں ہر طرح کے کردار اداکیے ہیں، لیکن ابھی تک کامیڈی کردار میں نظر نہیں آئیں۔ اس حوالے سے اداکارہ نے کہا کہ انہیں وہ لوگ پسند ہیں جن کی حس مزاح بہت اچھی ہوتی ہے لیکن اس کا یہ مطلب نہیں ہے کہ آپ دوسروں کا مذاق اڑائیں۔ بلکہ آپ خود پر کیے جانے والے  مذاق کو کس حد تک برداشت کرسکتے ہیں یہ بھی حس مزاح کا حصہ ہوتاہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں